27

ملتان میں ٨٠ سال سے بند تہ خانے سے خزانہ نکل آیا۔

پاکستان کے اہم تاریخی شہر ملتان میں جو کہ پاکستان کا آبادی کے لحاظ سے پانچواں بڑا شہر ہے پرانی عمارت میں کھدائی کے دوران خزانہ نکل آیا، ملتان شہر میں 80 سال سے بند عمارت کے کھولنے کے بعد کھدائی کے دوران خزانہ نکل آیا۔

تفصیلات کے مطابق میڈیا ذرائع کا کہنا ہے کہ ملتان شہر میں احاطہ کچھری میں ایک پرانا مال خانہ موجود ہے، یہ مال خانہ قیام پاکستان سے پہلے برطانوی دور حکومت میں بنایا گیا تھا، اس علاقے کے کچھری کے ایک وکیل صاحب کے مطابق اس پرانے اور مخدوش عمارت کو انگریزوں نے بنایا تھا اور یہ عمارت برطانوی راج کے سرکاری افسروں کا دفتر تھی، اس مال خانے کے اندر ایک اَنڈرگراؤنڈ تہ خانہ ہے جو خزانے سے بھرا ہوا ہے۔


مال خانے کے دروازے کے قریب لکھے ہوئے ’’ مال خانہ نمبر1‘‘ کی تصویر
ملتان شہر کے احاطہ کچھری میں موجود یہ عمارت 80 سال سے زائد عرصہ سے بند تھی، اب اس کو گرا کر اس کی جگہ کچھری کے نئے حصے، وکلا کے چیمبرز، انڈر گراؤنڈ پارکنگ اور نئی عدالت بنانے کے پراجیکٹ پر عمل کیا جا رہا تھا تو کھدائی کے دوران مزدوروں کو سونے کی اینٹیں ملی نیز مزدوروں کے کام کے دوران مزید اشرفیاں اور نوادرات نکل آئیں، بتایا جا رہا ہے کہ اس تہ خانے سے انگریز دور کا اسلحہ بھی نکلا ہے، یہ اسلحہ چونکہ اپنا ایک تاریخ رکھتی ہے اس لیے یہ بھی نایاب ہے۔

میڈیا ذرائع کے مطابق انتظامیہ کی جانب سے اس معاملے کو خفیہ رکھنے کی کوشش کی جا رہی تھی، ڈپٹی کمشنر ملتان کے حکم سے اب اس عمارت پر چوبیس گھنٹے پولیس تعینات ہے۔


ڈی سی ملتان کی طرف سے سیکیورٹی کے لیے جاری کردہ نوٹیفیکیشن

ڈسٹرکٹ اور سیشن جج کی ہدایت پر سول جج عمران عابد اور ایڈیشنل کمشنر ریونیو کی موجودگی میں اس عمارت کو مکمل طور پر سیل کر دیا گیا ہے، اس بارے میں پنجاب گورنمنٹ کو خط لکھ دیا گیا ہے اور آرکیالوجی ڈیپارٹمنٹ کو بھی مطلع کیا گیا ہے، اسی کے ساتھ ساتھ اس عمارت پر کام کرنے کے لیے مختلف محکموں پر مشتمل ارکان کی کمیٹی بنائی جائے گی لیکن فی الحال پنجاب گورنمنٹ کی طرف سے ہدایات آنے تک یہ عمارت سیل ہو گی اور یہاں پر کوئی کام نہیں ہوگا اور تب تک پولیس کی سیکیورٹی یہاں پر چوکس رہے گی۔

چونکہ اس عمارت سے بھاری مقدار میں سونا اور دیگر قیمتی نوادرات ملی ہیں اور مزید بھی بہت سی قیمتی اشیاء ملنے کی امید ہے لیکن اس بارے میں آگے کیا ہونے جا رہا ہے یہ تو آنے والا وقت ہی بتائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں